شبیر (ع )میرے سینے میں دلگیر تیرا غم



شبیر (ع )میرے سینے میں دلگیر تیرا غم 
اِس  کائنات میں مری جاگیر تیرا غم

ہر ایک رنج و غم کا مداوا غمِ حسین (ع )
ہر اک ستم رسید کو اکسیر تیرا غم

ممکن کہاں ہے شامِ غریباں کو سوچنا 
ممکن کہاں کہ ہو سکے تحریر تیرا غم

 میرے حسین( ع ) تیری تلاوت سرِ سناں 
ذبحِ عظیم کی ہے وہ تفسیر تیرا غم 

دل میں ہے جاگزیں تری بس یاد کے نقوش 
آنکھوں میں ہے وہ خواب کہ تعبیر تیرا غم

احمد عرفان 





مصنف کے بارے میں


...

احمد عرفان

?????? 20 - 1979 | گوجر خان پاکستان





Comments