تجھ ناز ستم گر سوں جھگڑ کون سکے گا



 تجھ غمزہ ِ خوں ریز سوں لڑ کون سکے گا
تجھ ناز ستم گر سوں جھگڑ کون سکے گا

پھرتی ہیں سیہ مست ہو شمشیر نظر لے
بن نیند اس انکھیاں کو پکڑ کون سکے گا

دریائے برہ غم میں مجھے ہے یونس دن
اس بحر میں دل باج سو پڑ کون سکے گا

مانند ولی تجھ سوں جو پایا شرف وصل
اس باج آپس دل سوں بچھڑ کون سکے گا






مصنف کے بارے میں


...

ولی محمد ولی

1667 - 1725 | Deccan


ولی دکنی اردو غزل کے رجحان ساز کلاسک شاعروں کی اولین صف میں ہیں




Comments