یہ کس نے باغ سے اُس شخص کو بلا لیا ہے




یہ کس نے باغ سے اُس شخص کو بلا لیا ہے
پرند اُڑ گئے پیڑوں نے منہ بنا لیا ہے

اُسے پتا تھا میں چھونے میں وقت لیتا ہوں 
سو اُس نے وصل کا دورانیہ بڑھا لیا ہے

یہ رات نام نہیں لے رہی تھی کٹنے کا 
چراغ جوڑ کے لوگوں نے دن بنا لیا ہے

درخت چھاؤں سے ہٹ کر بھی اور بہت کچھ ہے 
یہ کیسی چیز تھی اور ہم نے کام کیا لیا ہے

کُھرچ رہا ہوں میں دیوار پر لکھے ہوئے نام 
عجیب طرح کی اک بے بسی نے آ لیا ہے





مصنف کے بارے میں


...

تہذیب حافی

5 دسمبر 1989 - | تونسہ شریف


اصل نام تہذیب الحسن قلمی نام تہذیب حافی۔ نئے انداز سے بھرپور، جدید اور خوبصورت لب و لہجے کے نوجوان شاعر تہذیب حافی 5 دسمبر 1989 کو تونسہ شریف(ضلع ڈیرہ غازیخان) میں پیدا ہوئے۔ مہران یونیورسٹی سے سافٹ وئیر انجینرنگ کرنے کے بعد بہاولپر یونیورسٹی سے ایم اے اردو کیا۔ آج کل لاہور مین مقیم ہیں۔




Comments