... ایک دن عورت کا 2



لع // ... ایک دن عورت کا 2

آنکھ بھر، تُو جو یہ خوابوں کے ستارے لئے ہے
یاد رکھ! جیل یا گھر، جو بھی تیری منزل ہو
پاؤں کی جوتی سے بہتر نہ سمجھنے والے
کہتے ہیں پاؤں کی جنت بھی ہمارے لیے ہے

جہاں اک مرد سی آزادی تجھے حاصل ہو
یہ تو طے ہے کہ وہ دنیا ہے تباہی لایق
اِس پہ احسان جتاتے ہوے تھکتے بھی نہیں
ہم جو گنتے ہیں تجھے آدھی گواہی لایق

ہم تجھے اپنے برابر نہ سمجھنے والے
تیرے "ایّام" مناتے ہوے تھکتے بھی نہیں

#WomenDay





مصنف کے بارے میں


...

ادریس بابر

1974 - |


گوجرانوالہ پاکستان میں پیدا ہونے والے لکھاری نے انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور سے الیکٹریکل انجینئرنگ کی. پہلا شعری مجموعہ "یونہی" ۲۰۱۲ میں شائع ہو سکا جسے فیض احمد فیض ایوارڈ سے نوازا گیا۔ اکادمی ادبیات پاکستان کے لیے پاکستانی ادب کے سالانہ انتخاب سمیت پاکستانی نظم کا ستر سالہ انتخاب مرتب کیا. مجلس ترقی ادب لاہور کے لیے اردو غزل کے ستر سالہ انتخاب کی تدوین کی. متعدد زبانوں اور اصناف میں شاعری آور تراجم کے ساتھ ساتھ بابر نے عشرے کی صنف متعارف کرائی جسے بطور خاص جدید ترین لکھنے والوں کی نسل میں قبول عام حاصل ہوا.




Comments