قبولیت کی گهڑی



اپنی سی آئی اے کہ راموساد
دور نزدیک سے کزن ہی تو ہے
یہ ہمارا اور ان کا fun ہی تو ہے
جب نہیں چاہیں جس کو مروا دیں
جس پہ چاہیں لگا دیں پهر الزام
اس پہ بهی شور ہو تو جلدی میں
کل-عدم / اج-وجود تنظیمیں
آئیں گی اور کس بهلے دن کام
ان سے جن کے ننانوے ہیں نام
ذمہ داری قبووول!!! کروا دیں!






مصنف کے بارے میں


...

ادریس بابر

1974 - |


گوجرانوالہ پاکستان میں پیدا ہونے والے لکھاری نے انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور سے الیکٹریکل انجینئرنگ کی. پہلا شعری مجموعہ "یونہی" ۲۰۱۲ میں شائع ہو سکا جسے فیض احمد فیض ایوارڈ سے نوازا گیا۔ اکادمی ادبیات پاکستان کے لیے پاکستانی ادب کے سالانہ انتخاب سمیت پاکستانی نظم کا ستر سالہ انتخاب مرتب کیا. مجلس ترقی ادب لاہور کے لیے اردو غزل کے ستر سالہ انتخاب کی تدوین کی. متعدد زبانوں اور اصناف میں شاعری آور تراجم کے ساتھ ساتھ بابر نے عشرے کی صنف متعارف کرائی جسے بطور خاص جدید ترین لکھنے والوں کی نسل میں قبول عام حاصل ہوا.




Comments